Posts

Showing posts with the label حکیم ادریس حبان

Biyaz-e-Habban, Medicine, بیاض حبان, طب, Hakeem Idrees Habban, حکیم ادریس حبان,

Image
 Biyaz-e-Habban, Medicine, بیاض حبان, طب, Hakeem Idrees Habban, حکیم ادریس حبان,  یو تو تمام علوم اللہ تعالی کے نازل کردہ ہین، لیکن خصوصا "علم الابدان" رب کائنات کی وہ عطا اور فضل اور خاص فضل ہےجس کے ذریعہ بدن انسانی کی اصلاح کی جاتی ہے جسے مخلوق کی خدمت  کے ساتھ ساتھ عبادت کا پورا پورا حق حاصل ہے۔ علم طب اگرچہ بیسویں صدی سے طب یونانی، ایلوپیتھی، ہومیو پیتھی وغیرہ میں منقسم ہو گیا ہے لیکن اس کے باوجود وہ اپنی تمام اقسام میں "علم طب" ہی ہے۔ "طب یونانی" وہ واحد طریقہ علاج ہے جس کے مفردات و مرکبات اس اکیسویں صدی میں بھی نیچورل ہیں، یعنی قدرتی جڑی بوٹیوں کا استعمال یونانی ادویات کا خاص امتیاز ہے۔ جس کی بدولت کثیر حوادثات کے باوجود یہ علم آج تک موجود ہے، بلکہ نئی صدی کے آغاز سے ہی اس کی طرف عوال الناس کے کثیر رغبت اور اپنے علاج کے لئے طبیبوں اور حکیموں کا اتنخاب "علم طب یونانی" کا زندہ معجزہ ہے۔   یہ اللہ تعالی کا خاص فضل و کرم  اور احسان ہے کہ اس دور میں بھی فن طب یونانی کے ماہر اور تجربہ کار اطباء موجود ہیں جو پریشان حال مریضوں کے علاج و معالجہ

Bahr-e-Tibb se Chand Moti, بحر طب سے چند موتی, Medicine, طب, Hakim Idrees Habban, حکیم ادریس حبان,

Image
    Bahr-e-Tibb se Chand Moti, بحر طب سے چند موتی, Medicine, طب, Hakim Idrees Habban, حکیم ادریس حبان,  اللہ تعالی کا شکر و احسان ہے کہ اس نے انسان کو اشرف المخلوقات بنا کر اٹھارہ ہزار مخلوقات میں عزت بخشی۔ حضرت انسان  کے کمالات اور فنون و معرفت، دراصل حق تعالی شانہ کی بخشش اور عطا ہے۔ صناع عالم نے انسانی عقل و دماغ اور قلب میں وہ علوم و فنون و دیعت فرممادئے جو اللہ رب العزت کو پسند ہیں اور ان سے انسانی دنیا کو کما حقہ فوائد حاصل ہو رہے ہیں۔  والد بزرگوار ماہر نباض طبیب دوراں حضرت مولانا حکیم ڈاکٹر محمد ادریس حبان رحیمی عمت فیوضہم بانی رحیمی شفاخانہ بنگلور ایسی ہمہ جہت شخصیت ہیں جو نہ صرف مطب میں مریضوں کی تشخیص فرماتے ہیں بلکہ دوا سازی کے جملہ مراحل کو اپنی توجہ خاص سے تکمیل تک پہنچاتے ہیں۔ آپ قرآن و احادیث، فقہ اور اصلاحی کتب کے مطالعہ کے ساتھ طبی کتب کا مطالعہ بھی نہایت انہماک سے کرتے ہیں اور فرماتے ہیں کہ کتب بینی میری روحانی غذا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ بحر غواص سے نادر جواہرات اور انمول موتی چن لیتے ہیں۔ والد محترم کے صدقہ میں ان کی اولاد کو بھی یہ نعمت ملی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ والد محترم