علوم الإسلام

Thursday, January 27, 2022

Khushk Mewa Jaat se Elaj, Hakim Muhammad Azam Sufi, Medicine, خشک میوہ جات سے علاج, حکیم محمد اعظم صوفی, طب,

 Khushk Mewa Jaat se Elaj, Hakim Muhammad Azam Sufi, Medicine, خشک میوہ جات سے علاج, حکیم محمد اعظم صوفی, طب, 




لیموں، آب حیات ۔ لیموں قدرت کا گراں قدر عطیہ ہے۔ ماہرین حیات نے لیموں کو اکسیر کہا ہے۔ جگر کی ساری خرابیوں کو دور کرنے کے لیے لیموں آب حیات ہے۔ جو لوگ لیموں کے استعمال کو اپنا معمول بنا لیتے ہیں وہ کبھی پیٹ اور معدہ کے امراض کا شکار نہیں ہوتے۔ دل اور جگر کے جتنے مرض ہیں ان سب میں لیموں بے حد فائدہ مند ہیں۔ لیموں خون کو صاف کر دیتا ہے، چہرے کی رنگت نکھار دیتا ہے۔ دل دھڑکتا ہو تو اس تکلیف کے ازالہ کے لئے لیموں کا استعمال بے حد سود مند ہے۔ آدھے گلاس پانی میں ایک لیموں کا رس نچوڑ کر ناشتہ سے پہلے پی لینے سے بہت سست جگر بھی صحیح کام کرتے ہیں۔  بدہضمی کے ازالے کہ لیے کھانا کھانے سے ایک گھنٹہ پہلے پانی کا ایک گلاس جس میں لیموں کا رس ملایا گیا ہو معجزہ نما اثر رکھتا ہے۔

 

جو لوگ اس عمل کو اپنا معمول بنا لیتے ہیں انہیں کبھی بد ہضمی کی شکایت نہیں ہوتی۔ نہار منہ ایک گلاس نیم گرم پانی میں ایک لیموں نچوڑ کر پی لینا اپنا معمول بنا لیا تو لیموں کی معجزہ نمائی دیکھ کر آپ حیران ہو جائیں گے۔  گلے میں کسی طرح کی تکلیف ہو تو ایک کاغذی لیموں کا رس اور اتنا ہی شہد ملا کر چاٹنے سے آرام آجاتا ہے۔ نشاستہ اور پروٹین کو ہضم کرنے کے لئے بے حد فائدہ بخش ہے۔  معدہ میں ترشی کی کمی کی وجہ سے ہاضمہ خراب ہو تو لیموں بہت فائدے مند ہوتا ہے۔ قروح معدہ اور درد شکم لیموں کے رس کو دودھ میں ملا کر نہار منہہ پیا جائے تو دوسری دواؤں سے زیادہ فائدہ مند ہوتا ہے۔

Download

Khazinat-ul-Mujarbat, Pandat Kirshan Kanor Sharma, Medicine, خزینۃ المجربات, پنڈت کرشن کنور شرما, طب,

 Khazinat-ul-Mujarbat, Pandat Kirshan Kanor Sharma, Medicine, خزینۃ المجربات, پنڈت کرشن کنور شرما, طب, 



پنڈت کرشن کنور دت شرما اپنے استاد محترم جناب حکیم محمد عبد اللہ مرحومؒ کی طرح نسخہ جات کو چھپانا گناہ سمجھتے تھے۔ اسی لیے ان کے زیر نگرانی شائع ہونے والا رسالہ "آب حیات" ایک معمولی قصبہ ٹوہانہ سے شائع ہونے کے باوجود پورے بر صغیر میں مشہور ہو گیا۔ جو شہرت اس رسالہ کو نصیب ہوئی وہ کم ہی کسی اور کے حصہ میں اس کی 1939ء میں پنڈت صاحب 26 سال کی عمر میں وفات پاگئے تو رسالہ بند ہو گیا۔

 

 لیکن نصف صدی گذرنے کے باوجود شائقین طب ان پرچوں کی تلاش میں ہیں۔ ہم نے 1935ء سے 1937ء تک کے رسالہ آب حیات کے اہم نسخہ جات کو بمع تصدیقات آپ کی خدمت میں پیش کر دیا ہے۔ اس کا دوسرا حصہ بھی مرتب کر کے جلد آپ کی خدمت میں پیش کریں گے۔ ہمارا روز مرہ کا مشاہدہ اس بات کا گواہ ہے کہ دنیا میں جس قدر لوگ ضعف باہ کی شاکی ہیں اسی قدر کسی اور مرض کے ہاتھوں نالاں نہیں ہیں۔ کتابون اور رسالوں میں آئے دن نئے نئے نسخے اور مجربات خاص، بھی اس شکایت کو رفع کرنے کے لئے شائع ہوتے رہتے ہیں۔ مگر اب تک اس مرض کا کوئی خاص طور پر کامیاب نسخہ ہماری نظروں سے نہیں  گذرا۔  اس کی وجہ یہ بھی ہے کہ ہر مرض کے اسباب و علامات مرض میں بے حد تفاوت ہوتا ہے۔ اس لئے کوئی ایک نسخہ سب جگہ خاص طور پر کامیاب ہونا دشوار نظر آتا ہے۔ بے شمار تجربات کے بعد مندرجہ ذیل نسخہ ہم نے نہایت مفید پایا ہے۔ ۔۔۔۔۔


Download Part 1

Download Part 2

Download Part 3


Khazain-ul-Adwiya, Medicine, Allama Najm-ul-Ghani Rampuri, خزائن الادویہ, علامہ نجم الغنی رامپوری, طب,

 Khazain-ul-Adwiya, Medicine, Allama Najm-ul-Ghani Rampuri, خزائن الادویہ, علامہ نجم الغنی رامپوری, طب, 

خزینۃ الادویہ



مدح اعلی حضرت قدر قدرت خسروخرو آگاہ جہاں پرور عالم پناہ امیر الامراء ہز ہائنس نواب سر سید محمد حامد علی خان بہادر مستعد جنگ۔ طبابت مصر اول ملک مصر کے باشندوں میں سے کاہن اور مشائخ وغیرہ نے جو دوسرے علوم سے بھی بہرہ ور تھے چند باتیں جمع کر کے طبابت کو ایک علم قرار دیا۔ اپنی ضعفت اور بزرگی زیادہ ہونے کے واسطے ایسے مفید مطاب کو عوام الناس میں مشہور نہ کیا۔ یہ لوگ رو نیل کے سبب سے مصر کی زرخیزی تصور کر کے تمام چیزوں کی اصل پانی کو شمار کرتے تھے اور دارا اے اول کے زمانے تک جو حضرت عیسی علیہ السلام سے 1087ء برس پہلے بادشاہ ایران تھا۔

 

مصری حکیموں کا سب لوگ بڑا اعتبار کرتے تھے۔ افریقہ میں سیرین کے رہنے والے بھی طبیب حاذق تھے اپنے زمانے کی طبابت میں جیسا کہ چاہیئے ویسے لائق تھے۔ طبابت ہند جب مصر میں اس علم  کی ابتداء اور بنیاد ہوئی اور تواریخ سے ثابت ہے کہ ولایت مصر اہل ہند کے آنے سے آباد ہوئی تو کیا عجب ہے کہ ہندوستان میں طبابت کا چرچا زمانہ قدیم سے ہو مگر ہندوؤں کی کتب تواریخ میں طبابت کی بنا ( کہ جس مین سے سوائے اسکے کہ مردمان مفصلہ ذیل اپنے وقت کے نامی طبیب آئے ہوں ہم اور کسی بات کو تسلیم نہیں کرتے) یوں لکھی ہے کہ 385000 برس کا عرصہ گذرا کہ برھما جی نے ایک لاکھ اشلوک ویدک شاستر کے فرمائے۔ وہ اشونی کمار  سے اندر نے پڑھا اور اندر سے بھاردواج نے سیکھ کر اس علم کو رواج دبا انکے بڑے مشہور شاگرد چرک، سشترت اور واگھبٹ ہوئے۔

Download Part 1

Download Part 2

Download Part 3

Download Part 4

Wednesday, January 26, 2022

Hairat Angez Hafiza Namumkin Nahi, حیرت انگیز حافظہ ناممکن نہیں, Medicine, طب, حکیم طارق محمود چغتائی, Hakim Tariq Mahmood Chughtai,

  Hairat Angez Hafiza Namumkin Nahi, حیرت انگیز حافظہ ناممکن نہیں, Medicine, طب, حکیم طارق محمود چغتائی, Hakim Tariq Mahmood Chughtai, 



دنیا میں جتنے بھی لو گ باکما ل بے مثال بنے ہیں ۔ ان کی خاص وجہ لا زوال حافظہ اور بہترین یا داشت ہے۔ اس ورثے کے حصول کے لیے لو گو ں نے کیا کیا جتن کیے کیسے کیسے اسباب اختیار کیے کس کس دروازے کی ٹھوکریں کھا ئیں حتٰی کہ اگر کسی کے پاس حافظے کا کوئی گر‘ نسخہ یا راز ہواتو مہینو ں کا سفر کرکے اس کی چوکھٹ کے سوالی ہوئے لیکن اکثر بے مراد واپس ہوئے کیونکہ جو کوئی راز جانتا ہے وہ یہ راز اپنی قبر تک لے جاتاہے ۔ ایسے دور میں چند ایسے لو گ بھی ہیں جن کے اندر مخلو ق خدا کی خدمت کا جذبہ اور تڑپ ہے وہ اپنا جینا مرنا مخلو ق کی خدمت کے جذبے کو لیکر چلتے ہیں ۔ یہ کتا ب اس خدمت کے جذبے کا نام ہے کہ آپ اپنی یاداشت حافظے کو کس طر ح بہتر بنائیں کتا ب کیا ہے ایک تحفہ جو گھر کے ہر فرد اور عمر کے ہر شخص کی ضرورت ہے٭

 

 کتا ب میں دماغ کے اندر حافظے کی وجہ اسکے اسباب پھر اسکی علا مات حتی کہ اسکا شافی علا ج دیا گیا ہے ۔٭ کند ذہنی نالا ئقی یابیماری ایک نہایت آسان لیکن تحقیقی مضمون جو آپ کو اور آپ کی اولا د کو اس قابل بنا سکتا ہے کہ وہ اعلیٰ نمبروں اور اعلیٰ پو زیشن لیں حتی کہ اس ایک مضمو ن کو پڑھ کر شاید آپ کو پھر کسی کی مدد کی ضرورت نہ رہے ٭ ٹین ایج کے مسائل کے لیے نہایت حیرت انگیز اور آزمو دہ طریقے نادر انداز اور بہترین نسخے جس کو پڑھ کر طلباء اور والدین ترقی کے درجا ت نہایت آسانی سے طے کر سکیں گے ٭ اس کتا ب میں عنوان ہے اپنے آپ میں گم رہنے والے بچے پلیز یہ مضمو ن ضرور پڑھیں ٭ کیا آپ بھول جا تے ہیں یہ مضمون پڑھ کر آپ پہلو بدلے بغیر نہ رہ سکیں گے اور عش عش کر اٹھیں کہ واقعی کتا ب اس قابل ہے کہ گفٹ کی جائے٭ حافظے کے اسرار یہ ایک عنوان ہے اسکی تشریح پڑھ کر آپ خود یا پھر اپنی نسلو ں کو کند ذہنی اور ناکامی سے بچا سکتے ہیں ٭ انوکھی بات یہ ہے سو کے قریب معا لجین کے ذاتی سینے کے راز اور آزمودہ تجربات اور نسخہ جا ت جو بنا نے میں نہایت آسان اور ارزاں اور رزلٹ میں فوری اثر ۔ آئیے اس کتا ب کو پڑھیں اور دعا دیں۔

Download

Haiwani Dunya ke Ajaibat, حیوانی دنیا کے عجائبات, Medicine, طب, Abdul Basir Khan, عبد البصیر خان,

  Haiwani Dunya ke Ajaibat, حیوانی دنیا کے عجائبات, Medicine, طب, Abdul Basir Khan, عبد البصیر خان, 



جانوروں میں سو سائٹی کی نشو نما "ٹڈی دل" مشہو ہے اس کے پرے کے پرے اس تعداد میں چلتے ہیں کہ آسمان ڈھک جاتا ہے۔ سورج تک چھپ جاتا ہے۔ معلوم ہتا ہے کہ جیسے زمین کے اوپر کمبل تان دیا گیا ہو۔ سمندر میں بعض جگہوں پر مچھلیاں اتنی بڑی تعداد میں پائی گئی ہیں کہ جہازوں کا راستہ رک گیا ہے۔ لیکن ان میں سے کسی جماؤ کو بھی انجمن نہیں کہ سکتے۔ سوسائٹی کے معنی صرف ایک سے زیادہ جانداروں کا ایک جگہ ہونا ہی نہیں ہے بلکہ اس سے کچھ اور مراد ہے۔ ایک ھد تک یہ کہا جاسکتا ہے کہ شہد کی مکھیوں، بھڑوں، چیونٹیوں اور دیمکوں کی زندگی سوسائٹی کی مثالیں پیش کرتی ہے۔ لیکن اگر دراصل غور سے دیکھا جائے تو معلوم ہوگا کہ یہ بھی سوسائٹی کے اصولوں کی پابند نہیں اور اس لئے ان کی زندگی بھی کسی سوسائٹی کے تحت نہیں گذرتی۔ ان میں سے ہر ایک کا ایک خاص نظام ہے جو قدرت کی طرف سے ان کو پیدائش ہی کے وقت ورثے میں ملا ہے وہ اسی نظام کے ماتحت اپنی زندگی کو گذار دیتی ہیں اس میں کبھی کسی تبدیلی کا امکان نہیں۔ نہ اس میں کسی قسم  کی ترقی ہو سکتی ہے نا تنزل۔

Download

Halfia Mujarbat Hakeem-e-Inqilab, Hakim Yasin Chawla, Medicine, حلفیہ مجربات حکیم انقلاب, حکیم یاسین چاولہ, طب,

  Halfia Mujarbat Hakeem-e-Inqilab, Hakim Yasin Chawla, Medicine, حلفیہ مجربات حکیم انقلاب, حکیم یاسین چاولہ, طب, 




صابر فارما کوپیا  میں سب سے پہلے حکیم صاحب مرحوم کے اس کارنامہ حیات کو ہدیہ قارئین کرنا چاہتا ہوں جس پر ان کے مطب کی کامیابی کا تمام دارومدار تھا۔ یہ وہ آسان اور ضامن شفاء مجوموعہ نسخہ جات ہے جسے جس نے آزمایا فوراً پکار اٹھا

زفرق تا بقدم ہر کچا کہ می نگرم  

کرشمہ دامن دل می کشد کہ جا اینجاست۔

 

 حکیم صاحب مرحوم نے اس فارما کوپیا کی ترتیب میں کس قدر خون جگر دیا اس کا اندازہ صرف ارباب بصیرت ہی کر سکتے ہیں۔ آپ بھی انشاء اللہ اس کی نافعیت کو محسوس کئے بغیر نہ رہیں گے۔ تشریح اصطلاحات: اس کے تحت اصطلاحات ادویہ کی تشریح پیش کی جارہی ہے تاکہ قارئین حضرات روز مرہ کے مستعمل مرکبات کے اسمائے مجوزہ کے صحیح مفہوم کو سمجھ کر ان کے فوائد و اثرات سے مستفید ہو سکیں۔

 

 1۔ محرک: اس سے مراد ایسی دوا ہے جو کسی مفرد عضو کو سکون سے فعل میں لائے اس عضو کی متعلقہ تیزی کو تحریک کہتے ہیں۔ یہ تیزی سے اس عضو کے جسم میں اکساہٹ سے پیدا ہوتی ہے۔ یاد رہے ہر عضو اپنے متعلقہ مخصوص مزاج کی حامل ادویہ ، اغذیہ اور اشیاء سے اپنا فعل سر انجام دیتا ہے۔ یعنی محرک اعصاب اشیاء سے دماغ و اعصاب کے فعل میں تیزی پیدا ہو گی۔  اور محرک عضلات ادویہ وغیرہ سے قلب و عضلات کے فعل میں تیزی پیدا ہوگی اور اسی طرح غدی محرکات سے جگر و غدود کے افعال سرزد ہونگے۔ یعنی ہر محرک چیز اپنے عضوی و کیمیاوی افعال کے لحاظ سے منسوب ہوگی۔

 

 کے سبب ان میں جوع المجربات کا مرض پیدا ہو گیا ہے۔ اس لئے اس سقیم گروہ کے لا علاج مرض کا مداوا کرنے کے لئے حلفیہ مجربات حکیم انقلاب کے نام سے یہ مجموعہ پیش کیا جارہا ہے۔ مجھے یقین کام ہے کہ میرے بھائی اس تحفہ نادرہ کو اپنے لئے ہر طرح مفید پائیں گے۔


Download

Hikmat ke Mufeed Totkay, Baba Abdul Karim Gujrati, Medicine, حکمت کے مفید ٹوٹکے, بابا عبد الحکیم گجراتی, طب,

 Hikmat ke Mufeed Totkay, Baba Abdul Karim Gujrati, Medicine, حکمت کے مفید ٹوٹکے,  بابا عبد الحکیم گجراتی, طب,



ہزار ہزار شکر اس ذات کریم و رحیم کا جس نے ہمیں انسان پیدا کر کے اشرف المخلوقات کا اعزاز بخشا۔ اور ہماری تخلیق اس مٹی سے کی جو ان گنت مخلوق کے علاوہ شجر و حجر کی ماں ہے۔ اس مٹی سے پیدا ہونے والی ہر چیز آکر مٹی ہی ہو جاتی ہے۔ اس مٹی مین ایک یہ بھی وصف ہے کہ وہ ہمارے ہر دکھ کا علاج ہے

 

 اس مین پودے اگتے ہیں جو انسانی اور حیوانی بیماریوں کے علاج بھی ہیں۔ سونا، چاندی، تانبہ، لوہا اور دیگر دھاتیں جہاں دوسری ضروریات کو پورا کرتی ہیں وہاں یہ چیزیں ہمارے دکھ درد اور بیماری کے لئے علاج بن کر ہم پر خدائے کریم کا احسان ظاہر کر کے  اس کی خدائی اور حقیقت کا ثبوت بھی بہم پہنچاتی ہین۔ ہر وہ چیز جو زمین میں موجود ہے بیکار نہیں بلکہ ہمارے کام کی چیز ہے۔ اسی لئے قرآن میں ارشاد فرمایا کہ تم زمین کا آپریشن کرو ہم نے تمہارے لئے اس میں روزی اور بیش  بہا خزانے رکھے ہیں۔

Download